شریف خاندان کی تفصیلات فراہم کرنے سے ورجن آئی لینڈ کا انکار

برٹش ورجن آئی لینڈ نے شریف خاندان کے حوالے سے تفصیلات فراہم کرنے سے انکار کردیا ہے اور کہا ہے کہ پاکستانی حکام کی طرف سے بھیجی گئی درخواستیں ان کے قوانین کے مطابق نہیں ہیں۔

یہ انکشاف جیو نیوز کے پروگرام ’آج شاہزیب خانزادہ کے ساتھ‘میں لندن سے جیو نیوز کے نمائندے نے گفتگو کرے ہوئے کیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ جو حقائق پاکستان کی طرف سے بھیجی گئی درخواست میں بتائے گئے ہیں اس میں ایسا کوئی پس منظر بیان نہیں کیا گیا جو یہ ثابت کرتا ہو کہ برٹش ورجن آئی لینڈ میں قائم کمپنی یا افراد نے کوئی غیر قانونی کام کیا ہو۔

نیب ذرائع کی جانب سے فراہم کیے گئے خط میں برٹش ورجن آئی لینڈ حکام کی جانب سے کہا گیا ہے کہ درخواست میں یہ واضح ہونا ضروری ہے کہ افراد یا کمپنیوں کی طرف سے کرپشن کیسے کی گئی۔

ورجن آئی لینڈ کے حکام نے مزید بتایا کہ متعلقہ کمپنیوں اور افراد کے بینک کے نام اور اکاؤنٹس کی تفصیلات بھی فراہم نہیں کی گئیں۔

یعنی شریف خاندان کے حوالے سے نیب جو تحقیقات کررہا ہے اس کی جانب سے برٹش ورجن آئی لینڈ کو متعلقہ بینک اکاؤنٹس کی تفصیلات فراہم نہیں کی گئیں لہٰذا برٹش ورجن آئی لینڈ تعاون فراہم نہیں کر سکتا۔

خیال رہے کہ شریف خاندان کے خلاف نیب تحقیقات کررہا ہے اور اس تحقیقات میں سب سے اہم سوال یہ ہے کہ لندن کے فلیٹس کس کے ہیں اور یہ شریف خاندان کی ملکیت میں کب آئے۔

اس حوالے سے برٹش ورجن آئی لینڈ کا مؤقف بہت اہمیت رکھتا ہے کیونکہ لندن فلیٹس کی ملکیت آف شورکمپنیوں نیلسن اور نیسکول کی ہے اور یہ دونوں کمپنیاں برٹش ورجن آئی لینڈ میں رجسٹرڈ ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com