صنعتی خام مال کی ریگولیٹری ڈیوٹی مکمل ختم کی جائے،تنویرصوفی

پاکستان سوپ مینوفیکچررز ایسوسی ایشن کے چیئرمین تنویر احمد صوفی نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی ان کوششوں کو سراہا جس میں انہوں نے صنعتی خام مال کی ریگولیٹری ڈیوٹی میں کمی کی ہے۔ ان کے اس اقدام سے معلوم ہوتا ہے کہ وہ مقامی صنعت کی مشکلات سے آگاہی رکھتے ہیں۔سوپ ایسوسی ایشن کے چیئرمین نے بطور خاص نشاندہی کی کہ صنعتی خام مال کی ریگولیٹری ڈیوٹی جزوی طور پر نہیں بلکہ مکمل طور پر ختم کی جانی چاہئے۔ یہ امر قابل ذکر ہے کہ کچھ صنعتی خام مال ایسے ہیں جن کی درآمدی ڈیوٹی پہلے سے بہت زیادہ ہے اور موجودہ ریگولیٹری ڈیوٹی سے ان تمام خام مال کو اضافی بوجھ کا سامنا ہے۔تنویر صوفی نے توجہ مبذول کرائی کہ صابن کی صنعت کے ایک بنیادی خام مال سلفونک ایسڈ جس کا استعمال ڈٹرجنٹ بنانے کے لئے کیا جاتا ہے، جو ہر گھر کی روزمرہ کی ضرورت ہے۔ اس پر عائد اضافی ریگولیٹری ڈیوٹی کو فوری طور پر ختم ہونا چاہئے۔

Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com