ایس ایس پی تشدد کیس؛عمران خان کی حاضری سے استثنا کی درخواست منظور

ایس ایس پی تشدد کیس؛عمران خان کی حاضری سے استثنا کی درخواست منظور
ایس ایس پی تشدد کیس میں عمران خان کی آج حاضری سے استثنا کی درخواست منظور اور بریت کی درخواست سماعت کے لیے مقرر کر لی گئی۔

انسداد دہشت گردی عدالت کے جج شاہ رخ ارجمند نے عمران خان کے خلاف ایس ایس پی تشدد کیس کی سماعت کی جس کے دوران فاضل جج نے ملزم کی آج حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور کرلی۔

چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کی بریت کی درخواست بھی سماعت کے لیے مقرر کردی گئی جس پر 27 مارچ کو دلائل دیے جائیں گے۔

واضح رہے کہ تحریک انصاف کی جانب سے 2014 میں حکومت مخالف دھرنے کے دوران عمران خان سمیت پی ٹی آئی کے دیگر رہنماؤں کے خلاف ایس ایس پی تشدد، پی ٹی وی، پارلیمنٹ حملہ اور اشتعال انگیز تقاریر کے مقدمات درج کیے گئے تھے۔

انسداد دہشت گردی عدالت نے پی ٹی وی پارلیمنٹ حملہ کیس کی سماعت میں ڈاکٹر طاہر القادری، وزیراعلیٰ خیبرپختون خوا پرویز خٹک اور جہانگیر ترین بدستور مفرور قرار دے دیا۔

انسداد دہشت گردی عدالت کے جج کوثر عباس زیدی نے کیس کی سماعت کی۔

عدالت میںتحریک انصاف کے رہنما عارف علوی، اسد عمر اور اعجاز چوہدری پیش ہوئے جبکہ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے آج پیشی کے لئے استثنیٰ حاصل کر رکھا تھا۔

سماعت کے دوران عدالت نے مقدمے میں نامزد ملزمان ڈاکٹر طاہرالقادری، پرویز خٹک اور جہانگیر ترین کو بدستور مفرور قرار دے دیا اور حکم دیا کہ ملزمان کے اسٹیٹس پر جامع رپورٹ پیش کی جائے۔

عدالت نے کہا کہ رپورٹ میں بتایا جائے کہ کتنے ملزمان کی ضمانت ہوئی اور نامزد کتنے ملزمان نے استثنیٰ حاصل کیا اور کون مفرور ہے۔

سرکاری وکیل نے عمران خان کی مستقل استثنیٰ سے متعلق درخواست پر دلائل کے لئے وقت مانگ لیا جب کہ عدالت نے شاہ محمود قریشی اور شفقت محمود کی آج حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور کرلی۔

عدالت نے پی ٹی آئی پنجاب کے رہنما اعجاز چوہدری کی درخواست ضمانت بھی منظور کرلی۔

Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com