نظام تعلیم ختم ہونے پر مسلمان پیچھے رہ گئے، مسلمانوں نےعلم سے ترقی کی، تلوارسے نہیں۔ وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ انگریزوں کے تعلیمی نظام نے معاشرے میں طبقات پیدا کیے۔ مسلمانوں نےعلم سے ترقی کی، تلوارسے نہیں۔ تعلیم کا مقصد صرف پیسہ کمانا نہیں۔

اسلام آباد میں دینی مدارس میں زیرتعلیم طلبا کی تقریب تقسیم انعامات سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ نبی کریم ﷺ نے سب سے زیادہ زورتعلیم پردیا، مسلمانوں نےعلم سے ترقی کی، تلوارسے نہیں، اسلام ہمیں انسان بننا سکھاتا ہے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ انگریزی اردو نظام سے مدارس کو الگ کرنا ناانصافی ہے، دینی طلبا کو جدید تعلیم سے بھی آراستہ کیا جائے گا، علامہ اقبال نے پہلے مغربی فلسفے کو پڑھا، علامہ اقبال پڑھے لکھے طبقے کو اسلام کی طرف لائے، دینی طلبا کو اقبالیات بھی ضرور پڑھائی جائے۔ تعلیم کے بغیر معاشرہ ترقی نہیں کرسکتا علم طاقت ہے۔ نبی کریم ﷺ نے سب سے زیادہ زور تعلیم پر دیا۔ نبی اکرمﷺ نے فرمایا تھا کہ تعلیم حاصل کرنے کے لیے چین بھی جانا پڑے تو جائیں۔ تعلیم کا مقصد صرف پیسہ کمانا نہیں۔ 700 سال تک دنیا کے مشہور سائنسدان مسلمان تھے، برصغیر میں بہترین مدارس تھے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ انگریزوں نے سوچ سمجھ کر مسلمانوں کی تعلیم کا نظام ختم کیا، انگریز کے تعلیمی نظام نے طبقات پیدا کیے۔ نظام تعلیم ختم ہونے پر مسلمان پیچھے رہ گئے۔ انگریزوں نے دینی مدارس کے فنڈز اپنے تعلیمی نظام پر لگایا۔ تعلیم میں کمی مسلمانوں کے زوال کا باعث بنی۔ دینی تعلیم ہمیں اچھے برے کی تمیز بتاتی ہے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ترکی، پاکستان اور ملائیشیا نےمشترکہ ٹی وی چینل چلانےکا فیصلہ کیا ہے، انگریزی چینل کا مقصد مسلمانوں کا مقصد سامنے لانا ہے، مسلمانوں کے انگریزی چینل سے دنیا کو مسلمانوں کا پیغام جائے گا اور انگریزی چینل کے ذریعے مسلمانوں کا تشخص اجاگر کرنے کے لیے فلمیں بنائی جائیں گی۔ ہمارے ہیروز پر فلمیں بنائی جائیں تا کہ بچوں کو اپنے ہیروز کا علم ہو سکے۔