ملتان اور میانوالی میں کمسن بچوں کا زیادتی کے بعد قتل

میانوالی میں کمسن بچے کو زیادتی کے بعد قتل کردیا گیا جب کہ ملزمان لاش جانوروں کے باڑے میں دبا گئے مگر سر باہر رہنے سے راز فاش ہوگیا۔

علاقہ بٹیاں میانوالی کا ساڑھے 4 سالہ محمد ابراہیم نیازی ولد حمید اللہ خان گزشتہ شام کو گھر سے لاپتہ ہوا جس کی اطلاع پولیس کو دی گئی۔ گزشہ شب تلاش کے بعد بچے کی لاش گھر کے ساتھ جانوروں کے باڑے سے ملی جسے زمین میں دبا دیا گیا تھا، پہلے زیادتی پھر قتل کیا گیا۔

سوشل میڈیا اور میڈیا میں واقعہ رپورٹ ہونے پر پولیس حرکت میں آئی اور لاش کا پوسٹ مارٹم کرایا ۔ ملزمان کی تلاش شروع کر دی اس موقع پر ڈی پی او میانوالی حسن اسد علوی نے واقعہ کی تفتیش کیلیے پولیس ٹیم تشکیل دے دی ہے۔

دریں اثنا ملتان میں اغوا ہونے والے 14 سالہ لڑکے ارسلان کی لاش مل گئی، گزشتہ روز نہر نو بہار ملتان سے ایک لاش ملی، جس کی شناخت ارسلان کے نام سے کی گئی جو یکم اکتوبر کو شہر سے اغوا ہوا تھا۔

پولیس کے ذمے دار ذرائع کے مطابق ابتدائی تفتیش میں یہ بات سامنے آئی کہ 14 سالہ ارسلان کے ساتھ پہلے زیادتی کی گئی جس کے بعد اس کی زندگی کی باقی ماندہ سانسیں چھین لی گئیں، ارسلان کے اغوا ہونے کے بعد سے اس کے اہل خانہ متعلقہ تھانہ کے چکر لگا رہے تھے لیکن پولیس بچے کی تلاش میں یکسر ناکام رہی اور 5 دن بعد لاش مل گئی۔