کراچی میں طویل غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری، شہری پریشان۔

کراچی: شہر قائد میں بجلی کی طویل غیر لوڈشیڈنگ نے شہریوں کو اذیت میں مبتلا کر دیا۔

کے الیکٹرک کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے۔ شدید گرمی میں طویل غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ جس نے شہریوں کی زندگی اجیرن کر دی۔ دن اور رات کے اوقات میں مختلف علاقوں میں مسلسل ایک سے دو گھنٹے بجلی جانا معمول بن گیا۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ کے الیکٹرک کی جانب سے طویل غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے جس کا مسلسل دورانیہ کہیں ایک گھنٹے تو کہیں تین گھنٹے تک بھی ہے اور شہر کا کوئی علاقہ ایسا نہیں جو اس غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ سے محفوظ ہو۔

دوسری جانب ترجمان کے الیکڑک نے دعویٰ کیا ہے کہ لوڈشیڈنگ سے مستثنیٰ تمام رہائشی اور صنعتی علاقوں میں اب لوڈ شیڈنگ نہیں ہوگی تاہم لائن لاسز والےعلاقوں میں 6 سے 8 گھنٹے کی اعلانیہ لوڈشیڈنگ کی جا رہی ہے۔

ترجمان کے الیکڑک کے مطابق 260 ملین مکعب فٹ اضافی گیس ملنے سے بجلی کی پیدوارمیں بہتری آئی ہے جبکہ نجی پاور پلانٹس کو حبکو سے فرنس آئل کی فراہمی جاری ہے اور نجی پاور پلانٹس سے 200 میگا واٹ بجلی ملنا شروع ہو گئی ہے۔

دوسری جانب صوبائی وزیر امتیاز شیخ کا کہنا تھا کہ کراچی میں لوڈشیڈنگ کے معاملے پر کے الیکٹرک حکام سے بات کی ہے۔ کراچی میں لوڈشیڈنگ فرنس آئل کی کمی کی وجہ سے بڑھی ہے جبکہ پی ایس او نے بھی کے الیکٹرک کو فرنس آئل دینے سے معذرت کر لی ہے۔