ترچھی نظروں والی بچی کی وائرل میم ڈیجیٹل نیلامی کے لیے پیش

دو برس کی عمر میں انٹرنیٹ پر اپنی ایک تصویر کی وجہ سے سلیبرٹی بننے والی بچی سالوں بعد اب وہ وہی تصویر این ایف ٹی پر ہزاروں ڈالر میں نیلام کر رہی ہے۔

کلوئی کلیم جو اب 10 سال کی ہے، 2013 میں اس وقت مشہور ہوئی تھی جب ان کی والدہ نے کلوئی کی ایک ویڈیو انٹرنیٹ پر شیئر کی جس میں وہ ڈِزنی لینڈ کے سرپرائز ٹرِپ پر اپنی ناپسندیدگی کا اظہار کر رہی تھیں۔ ویڈیو میں ان کا ایک انداز سب کو بھا گیا۔

اور دیکھتے ہی دیکھتے اسی انداز کی  تصویر ناپسندیدگی کے اظہار کے لیے مقبول ترین میم بن گئی۔ کلوئی کی ویڈیو 20 ملین سے زائد مرتبہ دیکھی گئی اور ان کا ردعمل انٹرنیٹ سینسیشن بن گیا۔

اب کلوئی کے گھروالوں نے اس امیج کو بطور این ایف ٹی نیلام کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ بولی کا آغاز پانچ کرپٹوکرنسی سے ہوگا جو اس وقت 15 ہزار ڈالر کے برابر ہے۔

انسٹاگرام پر کلوئی کے 5 لاکھ فالوورز ہیں اور برازیل میں گوگل کے ایک اشتہار کے لیے بھی کام کر چکی ہے۔

این ایف ٹی ایسا ڈیجیٹل ٹوکن یا سند ہے جو آرٹ کے ان نادرِ نمونوں کے لیے جاری کی جاتی ہے جو طبعی حالت میں موجود نہیں ہوتے۔

حال ہی میں کئی ملین ڈالر کے این ایف ٹی کی فروخت کے بعد ڈیجیٹل آرٹ کے حقوق ملکیت کی مارکیٹ زوروں پر ہے۔ یاد رہے مارچ میں ٹوئٹر کے بانی جیک ڈورسی نے ملائشیا کے ایک بزنس مین کو اپنی پہلی ٹویٹ 2.9 ملین ڈالر میں فروخت کی تھی۔

اپریل میں ڈیزاسٹر گرل میم میں آنے والی خاتون نے وہ امیج پانچ لاکھ ڈالر میں فروخت کی تھی۔ اوورلی اٹیچڈ گرل فرینڈ نامی میم چار لاکھ 11 ہزار ڈالر میں بکی تھی۔