ایف اے ٹی ایف کا وفد مذاکرات کے لیے اسلام آباد پہنچ گیا

ایف اے ٹی ایف کے ایشیاء پیسیفک گروپ کا وفد مذاکرات کے لیے اسلام آباد پہنچ گیا ہے۔

فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) کا ایشیاء پیسیفک گروپ اسلام آباد پہنچ گیا، ایشیا پیسیفک گروپ کا 9 رکنی وفد ایگزیکٹو سیکریٹری گارڈن ہک کی سربراہی میں پاکستان سے مذاکرات کرے گا جو 3 روز تک جاری رہیں گے جب کہ مذاکرات سے قبل ایشیاء پیسفک گروپ کے وفد کا اجلاس شام 7 بجے ہوگا۔

ذرائع کے مطابق ایف اے ٹی ایف کا وفد منی لانڈرنگ کے حوالے سے کمپلائنس کی میوچئل ایولیویشن کرے گا، وفد پاکستان کی اینٹی منی لانڈرنگ اور کاونٹر ٹیررازم میتھاڈولوجی کے تنائج کا جائزہ لے گا جب کہ اسٹیٹ بینک، ایس ای سی پی، ایف آئی اے، وزارت خزانہ، وزارت خارجہ، وزارت داخلہ، نیشنل کاونٹر ٹیرارزم اتھارٹی اور سی ٹی ڈی کی ٹیموں سے ملاقات کرے گا۔

واضح رہے پاکستان کو 2012 سے 2015 کے دوران بھی ایف اے ٹی ایف واج لسٹ میں شامل کیا گیا تھا. اس لسٹ میں نام شامل ہونے کے بعد پاکستان کو عالمی امداد، قرضوں اور سرمایہ کاری کی سخت نگرانی سے گزرنا ہوگا جس سے بیرونی سرمایہ کاری بھی متاثر ہوسکتی ہے اور ساتھ ہی معیشت پر بھی منفی اثرات مرتب ہوں گے۔