نئے مرکزی امتحانی نظام کی وجہ سے صوبے کے تعلیمی نظام کی قلعی کھل کر سامنے آگئی

محکمہ تعلیم سندھ کے امتحانات کے مرکزی نظام نے صوبے میں آٹھویں (مڈل کلاس ) تک تعلیم کا پول کھول دیاہے۔ مرکزی امتحانی نظام کے تحت پانچویں سے آٹھویں جماعت تک کے 63 ہزارطلبہ فیل ہوگئے ۔

صوبہ سندھ کے محکمہ تعلیم کی طرف سے قائم کئے گئے نئے مرکزی امتحانی نظام کی وجہ سے صوبے کے تعلیمی نظام کی قلعی کھل کر سامنے آگئی ہے۔

صوبہ سندھ کی تاریخ میں پہلی بارمڈل امتحانات میں پانچویں سے آٹھویں جماعت تک 63 ہزاربچے فیل ہوگئے ہیں۔

صوبہ بھرمیں 6 لاکھ بچوں نے امتحانات کےلئے رجسٹریشن کرائی ، 5 لاکھ بچوں نے امتحانات میں شرکت کی جن میں سے 63 ہزار بچے کامیابی حاصل نہ کرسکے۔

سندھ کے محکم تعلیم کے مطابق چار پرچوں کا صوبے بھر میں بیک وقت امتحان لیا گیا۔ سب سے زیادہ بچے حساب کے پرچوں میں فیل ہوئے۔

واضح رہے کہ فیل ہونے والے 63 ہزار بچوں کا 3 اور4 اگست کو دوبارہ امتحان لیا گیا۔ لیکن 12 اضلاع نے دوبارہ لئے گئے امتحان کے نتائج ابھی تک محکمہ تعلیم کو نہیں بھیجے ہیں ۔