پنجاب میں بیوٹی پارلر، جم، حجام اور ہیلتھ کلب کیلیے ایس او پی جاری۔

لاہور: سیکریٹری پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کیئر کیپٹن (ر) محمد عثمان نے پنجاب میں لاک ڈاؤن میں نرمی کے پیش نظر بیوٹی پارلر، جم، حجام اور ہیلتھ کلب کیلیے ایس او پی جاری کر دیے ہیں۔

نوٹیفکیشن کے مطابق بیوٹی سیلون اور حجام کی دکانوں کے لیے ہدات جاری کی گئی ہے کہ ایک وقت میں ایک گاہک کی حکمت عملی اپنائی جائے تاکہ دکان میں رش نہ ہو۔

ہدایت کی گئی ہے کہ انتظار گاہ میں گاہک زیادہ سے زیادہ پندرہ منٹ تک بیٹھ سکتا ہے، گاہکوں کو ٹیلیفون کے ذریعے وقت دینے کی حکمت عملی اپنا کر رش سے بچا جائے۔

یہ بھی کہا گیا ہے کہ گاہک کو بھی ترغیب دی جائے کہ وہ ماسک پہنے یا منہ کپڑے سے ڈھانپ کر رکھے، کھانسی یا چھینک کی صورت میں منہ کہنی سے ڈھانپ لیں، بعد میں فورا ہاتھ صابن سے دھوئیں۔

نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ کوڑا کرکٹ، بال وغیرہ کو مناسب جگہ گڑھا گھود کر دبائیں یا کوڑا اٹھانے والی کمپنی کو دیں، ایک گاہک پر استعمال کردہ تولیہ دوسرے گاہک پر استعمال نہ کریں، کاغذی تولیے استعمال کرنے کو ترجیح دیں۔

سیکریٹری پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کیئر کی جانب سے جاری کردہ نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ بار بار ہاتھ لگنے والی اشیاء کرسیاں، میز، دروازے وغیرہ کو بار بار واشنگ پاؤڈر یا 0.05 فیصدکلورین کے محلول سے صاف کریں۔

نوٹیفکیشن میں ہدایت کی گئی ہے کہ نیا گاہک بٹھانے سے پہلے کرسی کو جراثیم کش محلول سے صاف کریں، ہر گاہک کے لئے نیا ڈسپوزایبل بلیڈ استعمال کریں، استعمال شدہ بلیڈ ڈبے میں اکٹھے کر کے تلف کریں۔

ہدایت جاری کی گئی ہے کہ گاہک کے لئے جراثیم سے پاک کردہ کنگھی استعمال کریں، کنگھی اور دیگر پلاسٹک کے آلات کلورین کے محلول میں ڈال کر جراثیموں سے پاک کریں، ہو سکے تو ڈسپوزایبل کنگھی استعمال کرنے کو ترجیح دیں۔

نوٹیفکیشن کے مطابق دھاتی آلات مثلاً قینچی، نیل کٹر، موچنا، وغیرہ ایک گاہک پر استعمال کے بعد الکوحل سے بنے جراثیم کش محلول میں دھوئیں۔

نوٹیفکیشن کے مطابق کہا گیا ہے کہ گاہک کا کام کرنے سے پہلے ہاتھ صابن سے دھویں، حجام یا گاہک میں بخار، کھانسی یا گلا خراب کی علامات ہوں تو فورا ٹیسٹ کروایں۔

سیکرٹری پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر کی جانب سے جم اور ہیلتھ کلب کے لئے جاری کردہ ایس او پی کے مطابق جم پر صابن سے ہاتھ دھونے یا سینیٹائز کرنے کی سہولت مہیا کرنا لازم ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق جم کے عملے اور ممبر دونوں کے لئے سرجیکل ماسک پہننا اور سماجی فاصلہ برقرار رکھنا لازم ہے، جم کے اندر کھانسنے اور چھینکنے کے آداب اور احتیاطی تدابیر اپنائی جائیں۔ ایک وقت میں جم کی ٹوٹل کیپسٹی کے 50 فیصد تک کے ممبرز کو جم میں آنے کی اجازت ہے۔

ہدایت جاری کی گئی ہے کہ جم میں ہاتھ ملانے یا گلے ملنے کی اجازت نہیں ہے، ممبرز ایک دوسرے سے 2 میٹر کا فاصلہ رکھیں، ایک ممبر کے استعمال کے بعد ورزش کی مشین دوسرا ممبر 5 منٹ کے وقفے سے استعمال کرے گا۔

سیکریڑی پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر کے نوٹیفکیشن کے مطابق 10×10 کی جگہ میں صرف 2 ممبران کو ورزش کی اجازت ہو گ، جم کی کرسیاں، میز، دروازے کے ہینڈل وغیرہ کو 0.05 فیصد کلورین کے محلول سے صاف کریں۔