جعلی اکاؤنٹس کیس:‌ سندھ ہائیکورٹ نےآصف زرداری اور فریال تالپور کی ضمانت منظور کرلی

سندھ ہائیکورٹ نے پارک لین اور جعلی اکاؤنٹس کیس میں آصف زرداری اور فریال تالپور کی عبوری ضمانت منظور کر لی ہے۔

تفصیلات کے مطابق دونوں کیسز میں سندھ ہائی کورٹ نے سابق صدر کی 10 روز کے لئے حفاظتی ضمانت 10 لاکھ روپے کے عوض منظور کی گئی، ساتھ ہی عدالت نے حکم دیا کہ 10 روز بعد متعلقہ عدالت میں پیش ہوا جائے۔

اس کے علاوہ سندھ ہائی کورٹ نے جعلی اکاؤنٹس کیس میں فریال تالپور کی عبوری ضمانت بھی 10 روز کیلئے منظور کی، اور انہیں بھی 10 لاکھ روپےزر ضمانت جمع کرانے کا حکم دیا ہے۔

اس سے قبل آج ہی میگا منی لانڈرنگ کیس میں سابق صدر اور فریال تالپور نے گرفتاری سے قبل حفاظتی ضمانت کی درخواست سندھ ہائی کورٹ میں دائر کی تھی جبکہ آصف زرداری نے نیب کے کال اپ نوٹس کو بھی سندھ ہائیکورٹ میں چیلنج کیا تھا۔

سندھ ہائی کورٹ میں دائر درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ نیب نے سابق صدر کو 20 مارچ کو اسلام آباد طلب کر رکھا ہے،آصف زرداری ملک کے سابق صدر اور پی پی کے صدر ہیں لہذا نیب کو گرفتاری سے روکا جائے۔

درخواست میں موقف اپنایا گیا تھا کہ آصف زرداری کو ہمیشہ سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا گیا ہے اور اسی انتقام کے تحت وہ گیارہ برس جیل کاٹ چکے ہیں،جن الزامات کے تحت انہوں نے جیل کاٹی وہ جھوٹے ثابت ہوئے ہیں۔

واضح رہے کہ نیب نے پارک لین کرپشن کے معاملے پر دونوں رہنماؤں کو بیس مارچ کو لاہور طلب کررکھاہے۔

نیب ذرائع کے مطابق آصف زرداری اور بلاول بھٹو پارک لین اسٹیٹ کمپنی کے 25,25 فیصد شیئر ہولڈرز ہیں جبکہ ملزمان پر جنگلات کی زمینوں کی غیرقانونی الاٹمنٹ کا بھی الزام ہے۔