نیشنل اسٹیڈیم کراچی میں 10 برس بعد ون ڈے کرکٹ کی واپسی

پاکستان اور سری لنکا کے درمیان تین میچوں پر مشتمل ایک روزہ سیریز کا پہلا میچ آج نیشنل اسٹیڈیم کراچی میں کھیلا جائے گا۔

میچ دوپہر3 بجے شروع ہوگا جو رات پونے گیارہ بجے تک جاری رہے گا۔ اس موقع پر سیکورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کئے گئے ہیں۔ 5 ہزار سے زائد پولیس اور رینجرز اہلکار سیکورٹی کے فرائض انجام دے رہے ہیں۔ میچ سے تین گھنٹے قبل اسٹیڈیم کے اطراف کی سڑکیں بند کردی جائیں گی۔

سیریز کے تینوں مقابلے کراچی میں بالترتیب جمعہ ، اتوار اور بدھ کو شیڈول ہیں۔ محکمہ موسمیات نے پہلے دونوں میچز میں بارش کی پیش گوئی کی ہے اور موسم کے باعث کھیل متاثر ہونے کا خدشہ موجود ہے۔ رات گئے شہر کے مختلف علاقوں میں بارش ہوئی جبکہ گزشتہ روز دوپہر کو بھی ابررحمت کی وجہ سے قومی ٹیم کی پریکٹس کچھ دیر کیلیے روکنا پڑی تھی۔

نیشنل اسٹیڈیم میں 10 برس بعد ون ڈے کرکٹ کی واپسی ہونے جارہی ہے، سری لنکن ٹیم اس بار بھی شہر قائد کے سونے میدان آباد کرنے میں پاکستان کی مدد میں پیش پیش ہے۔

2009 میں لاہور میں سری لنکن ٹیم پر دہشت گرد حملے کے بعد پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ کے دروازے بند ہوگئے تھے، تاہم اس کے بعد پی سی بی کی مسلسل کاوشوں کے نتیجے میں ملک میں انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی بتدریج ممکن ہوئی۔

2018 میں کراچی میں پاکستان سپر لیگ کا فائنل شاندار انداز میں منعقد کیاگیا ، جس میں کئی نامور اسٹارز نے شرکت کی تھی، جس کے ذریعے 9 برس بعد اس میدان میں انٹرنیشنل کرکٹرز کی واپسی ممکن ہوئی۔

اب سری لنکا سے سیریز کے ذریعے یہاں پر 10 برس بعد ون ڈے انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی ہوگی۔