چیف جسٹس برطانیہ کا دورہ مکمل کرکے وطن واپس پہنچ گئے

چیف جسٹس سپریم کورٹ جسٹس ثاقب نثار اپنے سات روزہ نجی دورہ مکمل کرنے کے بعد اسلام آباد پہنچ گئے، جہاں وہ آج سپریم کورٹ میں اہم مقدمات کی سماعت کرینگے۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار برطانیہ کے ایک ہفتے کے دورے کے بعد قومی ایئر لائن(پی آئی اے )کی پرواز 786 کے ذریعے اسلام آباد ایئر پورٹ پہنچے۔

چیف جسٹس نے برطانیہ میں اپنے سات روزہ قیام میں اپنے بیٹے کی گریجویشن تقریب میں شرکت کے علاوہ برطانیہ بھر میں پاکستان میں ڈیموں کی تعمیر کےلیے فنڈجمع کرنے کی متعدد تقریبات میں شرکت کی اور خطاب کیا۔

پاکستان روانگی سے قبل لندن میں میڈیا سے گفتگو کے دوران انہوں نے کہا کہ وہ علیمہ خان کےخلاف از خود نوٹس پر ابھی بات نہیں کریں گے،انہوں نے مزید کہا کہ جو تحریک شروع کر دی ہے اس کی محافظ پوری قوم ہے، اوورسیز پاکستانیوں کی محبت کو ہمیشہ یاد رکھیں گے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق برطانیہ میں دیامر بھاشا ڈیم کی تعمیر کیلئے فنڈز اکھٹے کرنے کیلئے تقریب کا انعقاد کیا گیا جس کی ٹکٹ ایک ہزار او ر 15 ہزار پاﺅنڈ رکھی گئی تھی اور اس کے باوجود بھی تقریب میں بیٹھنے کیلئے گنجائش ختم ہو گئی تھی ۔ میڈیا میں چلنے والی خبروں کے مطابق عمران خان کے قریبی دوست انیل مسرت نے 8 لاکھ پاونڈ ڈیم فنڈ کیلئے عطیہ کیے ،جس کے بعد مجموعی طور پر ایک ارب سے زائد کی رقم جمع ہوگئی ہے ۔

دوسری جانب چیف جسٹس آج ہی سپریم کورٹ اسلام آباد میں اہم مقدمات کی سماعت کریں گے، جن میں اعظم سواتی کیس بھی شامل ہے۔